Skip navigation (access key S)

Access Keys:

میری آمد پوشیدہ رکھیں

کسی سے ابھی بات کرنے ضرورت ہے؟

  • مفت، رازدارانہ قانونی مشورہ حاصل کریں

    08001 225 6653پر کال کریں
  • پیر تا جمعہ صبح 9 تا شام 8:00بجے
  • بروز ہفتہ صبح 9 بجے - دوپہر 12:30 بجے
  • کالیں 4 پنس/ منٹ – یا ہم سے واپس کال کرنے کیلئے کہیں

اپنے علاقے میں قانونی صلاحکار تلاش کریں

21 مجھے اپنی یونیورسٹی سے پریشانیاں ہیں۔ میں کیا کر سکتا ہوں؟

اگر آپ کو اپنی یونیورسٹی کی طرف سے کسی مشکل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے تو یاد رکھیں کہ آپ کو رشتے کے حقوق حاصل ہیں۔ یونیورسٹی سے آپ کے رشتے کا انضباط اسی مجموعہ ضوابط سے ہوتا ہے جو کسی دوسرے معاہدے پر عائد ہوتے ہیں۔ آپ کی یونیورسٹی بھی ان مخصوص اصولوں کی پابند ہے جن کا اطلاق سرکاری اداروں پر ہوتا ہے۔ اس کے علاوہ، آپ کی یونیورسٹی کے اپنے ضابطے ہوں گے جو دیگر یونیورسٹیوں سے مختلف ہوں گے۔

آپ کو عموماً یہ قواعد و ضوابط یونیورسٹی کے دستور العمل میں مل جائیں گے جو آپ کو پہلی بار داخلے کی درخواست دیتے وقت دیے گئے ہوں گے۔ آپ کو اضافی معلومات اس دستی کتابچے میں بھی مل جائیں گی جسے یونیورسٹی یا خود آپ کے شعبے نے تیار کیا ہو۔

اگر آپ خود کو درپیش مشکلات سے متعلق مشورہ چاہتے ہوں تو بہترین طریقہ یہ ہے کہ انجمن طلباء سے رابطہ کریں کیونکہ اس سے متعلق لوگ آپ کی مخصوص یونیورسٹی اور اس کے انفرادی ضوابط کے بارے میں زیادہ جانتے ہوں گے۔ انجمن طلباء کے صلاح کاران آپ کو آپ کے حقوق اور اپیل کے طریقے سے متعلق مشورہ دے سکیں گے۔ وہ ان متعلقہ عمومی قوانین کی اچھی واقفیت بھی رکھتے ہوں گے جن کا اطلاق آپ اور یونیورسٹی کے درمیان تعلقات پر ہوتا ہے۔ آپ کی انجمن طلباء ان کتابچوں اور ضابطوں کی نقول بھی آپ کو فراہم کر سکتی ہے جن کا اطلاق آپ کے معاملے پر ہوتا ہے۔

اگر آپ اپیل کی داخلی کارروائیوں اور اپنی اسٹوڈنٹس یونین سے مشورے کے عمل سے گزرنے کے بعد بھی اپنی مشکل کو حل نہ کر پائیں تو آپ 0118 959 9813 پر یا www.oiahe.org.uk پر انڈی پنڈنٹ ایڈجوڈی کیٹر کے دفتر کو شکایت بھیجنے پر غور کر سکتے ہیں۔ اور آخر میں، آپ کو کسی وکیل یا اعلی تعلیم کے قانون میں اختصاص رکھنے والی تنظیم کی مدد کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔ تاہم، عدالتوں کو بہت محدود اختیارات حاصل ہوتے ہیں خصوصاً جب آپ کی شکایت کا تعلق ان فیصلوں سے ہو جو یونیورسٹی نے آپ کے کام کے بارے میں دیا ہو۔

اگر آپ کے مسئلے کا تعلق آپ پر واجب الادا فیس کی سطح کے بارے میں یونیورسٹی یا آپ کے مقامی مقتدرہ کی طرف سے انجام دیے گئے جائزے سے ہے تو اس کی جانچ بھی آپ کی اسٹوڈنٹس یونین کو کرنی چاہیے۔ تاہم، اگر آپ کو مسائل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہو تو آپ کو جلد از جلد ماہرانہ قانون مشورہ حاصل کرنا چاہیے کیونکہ ان فیصلوں کو چنوتی دینے کے لیے وقت بہت محدود اور کم ہوتا ہے۔

اگر آپ اپنے دیگر انتخابات آزما چکے ہوں اور وہ کارگر نہ ثابت ہوئے ہوں تو ہم سفارش کرتے ہیں کہ آپ اختصاصی مشورے کے لیے تعلیمی امور سے متعلق ہمارے صلاح کاروں میں سے کسی سے بات کریں۔

واپس اوپر جائیں